نا اہلی کے خلاف اپیل کا فیصلہ میرے حق میں نہ آیا تو سیاست چھوڑ دوں گا، جہانگیر ترین

نا اہلی کے خلاف اپیل کا فیصلہ میرے حق میں نہ آیا تو سیاست چھوڑ دوں گا، جہانگیر ترین
فوٹو: فائل

اسلام آباد: پاکستان تحریک انصاف کے مرکزی رہنما جہانگیر ترین نے سیاست سے کنارہ کش ہونے کا عندیہ دیتے ہوئے کہا ہے کہ عمران خان کو وزیراعظم دیکھنا میرا مشن تھا،نا اہلی کے خلاف اپیل کا فیصلہ میرے حق میں نہ آیا تو گھر بیٹھ جاووں گا۔


ایک انٹرویو کے دوران جہانگیر خان ترین نے کہا کہ عمران خان کو وزیراعظم کے عہدے پر دیکھنا میرا مشن تھا جیسے ہی عمران خان وزیراعظم بنیں گے میں سیاست سے کنارہ کشی اختیار کر لوں گا اور گھر بیٹھ جاوں گا۔ صحافی نے سوال کیا کہ آپ کی نا اہلی کے خلا ف اپیل کا فیصلہ آنا بھی باقی ہے اور آپ ابھی سے دلبر داشتہ ہو گئے ہیں ؟جس پر جہانگیر ترین نے جواب دیا کہ اگر فیصلہ میرے حق میں آ یا تو بہتر ورنہ مزید سیاست جاری نہیں رکھوں گا اور گھر بیٹھوںگا کیونکہ اگر قانون مجھے اسمبلی کے لئے اہل نہیں سمجھتا تو پھر میرا گھر بیٹھنا ہی بہتر ہے۔

یہ بھی پڑھیں۔۔۔ون ڈ ے رینکنگ ، پاکستانی کھلاڑیوں کو محنت کا صلہ مل گیا 

انہوں نے کہا کہ پنجاب میں ہمارے ایم پی ایز کی تعداد 131 ہو چکی ہے اور تحریک انصاف سب سے بڑی جماعت بن کر حکومت بنانے کے قریب ہے جبکہ مزید آزاد ارکان بھی شامل ہو رہے ہیں۔