مجھے آف سکرین رومانس سے انکار پر فلموں سے ہاتھ دھونا پڑا، ملیکا شراوت

مجھے آف سکرین رومانس سے انکار پر فلموں سے ہاتھ دھونا پڑا، ملیکا شراوت

ممبئی:بالی ووڈ میں اقربا پروری پر وقتا بوقتا بات ہوتی رہتی ہے اور کئی نامور اداکار یہ اعتراف بھی کر چکے ہیں کہ انڈسٹری میں اقربا پروری موجود ہے۔علاوہ ازیں بولی وڈ میں کام کے بدلے جنسی تعلقات اور رومانس کی باتیں بھی ہوتی آئی ہیں اور ماضی میں آئٹم گرل ملیکا شراوت بھی یہ انکشاف کر چکی ہیں کہ ماضی میں انہیں کام کے بدلے جنسی تعلقات کا مطالبہ کیا گیا۔


اداکارہ نے جولائی 2018 میں انکشاف کیا تھا کہ ماضی میں ان سے کہا گیا کہ جس طرح وہ اسکرین پر لوگوں سے رومانس کرتی ہیں، اسی طرح آف سکرین بھی رومانس کریں گی تو فلموں میں کام ملے گا۔ ملیکا شراوت نے دعویٰ کیا تھا کہ انہیں آف سکرین رومانس سے انکار کے باعث کئی فلموں سے ہاتھ دھونا پڑا۔ اور اب انہوں نے بولی وڈ کے حوالے سے نیا انکشاف کرکے سب کو حیران کردیا۔

اداکارہ ملیکا شراوت میں فلموں میں کم آنے کی وجہ سے بتاتے ہوئے الزام عائد کیا ہے کہ اداکار فلم میں انہیں کاسٹ کرنے کے بجائے اپنی گرل فرینڈز کو ترجیح دے رہے ہیں۔اپنے ایک انٹرویو میں اداکارہ نے انکشاف کیا کہ بالی ووڈ ہیروز اپنی فلموں میں انہیں کاسٹ کرنے کے بجائے اپنی گرل فرینڈز کو کاسٹ کر رہے ہیں۔

ملیکا شراوت نے کسی بھی اداکار کا نام لیے بغیر بتایا کہ انہیں ہر معاملے اور مسئلے پر رائے رکھنے اور آواز اٹھانے کی وجہ سے نظر انداز کیا جا رہا ہے اور انہوں نے کئی اداکاروں کو اپنی فلموں میں ان کی جگہ گرل فرینڈز کو کاسٹ کرتے ہوئے دیکھا۔

اداکارہ نے کسی بھی فلم یا کسی بھی اداکار کی گرل فرینڈ کا نام لیتے ہوئے دعویٰ کیا کہ انہیں اس وقت سے نظر انداز کیا جانے لگا ہے جب سے بالی ووڈ میں خواتین کی اہمیت و حیثیت پر بات کرنے سمیت دیگر معاملات پر اپنی رائے دینے لگی ہیں۔اداکارہ کے مطابق جب وہ ماضی میں خواتین کے حقوق اور بالی ووڈ میں خواتین کی عزت و حیثیت پر بات کرتی تھیں تو کسی کو ان کی بات سمجھ نہیں آتی تھی، اب حالات کچھ بدلنے لگے ہیں۔

انہوں نے دعویٰ کیا کہ انہیں کچھ اداکاروں کی وجہ سے 20 سے 30 فلموں میں کام نہیں مل سکا۔اداکارہ کے مطابق انہوں نے خود کچھ بالی ووڈ اداکاروں کو یہ دوسروں سے یہ کہتے سنا کہ ملیکا شراوت بہت بولتی ہے اور ہر مسئلے پر بولتی ہے اس لیے اسے فلموں میں کاسٹ مت کریں۔