ویسٹ انڈیز نے پاکستان کیخلاف 13 رکنی ٹیم اور مینجمنٹ کا اعلان کر دیا

ویسٹ انڈیز نے پاکستان کیخلاف 13 رکنی ٹیم اور مینجمنٹ کا اعلان کر دیا
west indies team pakistan squad announce

ڈومینیکا : پاکستان کے خلاف تین ٹی ٹوئنٹی میچز کی سیریز کے لیے ویسٹ انڈیز نے 13 رکنی سکواڈ اور ٹیم مینجمنٹ کا اعلان کر دیا , پاکستان اور ویسٹ انڈیز کی کرکٹ ٹیموں کے درمیان یکم، دو اور تین اپریل کو کراچی میں تین ٹی ٹوئنٹی میچز کی سیریز کھیلی جائے گی۔


ویسٹ انڈین کرکٹ بورڈ کی جانب سے اعلان کردہ سکواڈ میں جیسن محمد (کپتان)، سیموئل بدری، ریاد ایمرٹ، آندرے فلیچر، آندرے میک کارتھی، کیمو پال، ویرا سیمی پرمال، رومین پاویل، دنیش رام دین، مارلن سیموئلز، اوڈین اسمتھ، چیڈوک والٹن اور کیسرک ولیمز شامل ہیں۔

ویسٹ انڈین ٹیم منیجمنٹ یونٹ میں اسٹیورٹ لاء (ہیڈ کوچ)، الفونسو تھامس (معاون کوچ)، ریان میرون (معاون کوچ)، ویرنن ولیمز (فزیوتھراپسٹ) اور ڈیکسٹر آگسٹس (ویڈیو ڈیٹا اینالسٹ) شامل ہیں۔

ویسٹ انڈین کرکٹ بورڈ کے ڈائریکٹر جمی ایڈمز اور  ویسٹ انڈیز پلیئرز ایسوسی ایشن کے سربراہ ویول ہائنڈز بھی ٹیم کے ہمراہ پاکستان آئیں گے ، دورہ پاکستان کے حوالے سے ویسٹ انڈیز کرکٹ بورڈ کے چیف ایگزیکٹو آفیسر جونی گریو نے کہا کہ ’کراچی میں پاکستان سپر لیگ کے فائنل کے کامیاب انعقاد کے بعد ہماری ٹیم ٹی ٹوئنٹی سیریز کیلئے پاکستان پہنچ رہی ہے۔

انہوں نے کہا کہ یہ ٹور پاکستان کرکٹ بورڈ میں موجود ہمارے دوستوں کے لیے ایک اور اہم اور بڑا قدم ہے تاکہ پاکستان میں کرکٹ واپس لائی جاسکے، ہمیں خوشی ہے کہ ہمارے کھلاڑیوں اور سپورٹ اسٹاف نے اسے سمجھا اور تعاون کیا۔

جونی گریو نے مزید کہا کہ خودمختار سیکیورٹی ایڈوائزرز ایسٹرن اسٹار انٹرنیشنل نے کرکٹ ویسٹ انڈیز اور ویسٹ انڈیز پلیئرز ایسوسی ایشن کو بتایا کہ دورے کے حوالے سے خطرات اس نوعیت کے ہیں کہ انہیں قابو کیا جاسکتا ہے۔

انہوں ںے کہا کہ ہم نے اپنے کھلاڑیوں اور سپورٹ اسٹاف کو یہ بات واضح کردی تھی کہ اگر انہیں اس دورے کے حوالے سے کوئی ذاتی تحفظات ہیں تو ہم انہیں پوری طرح سمجھتے ہیں اور ان کے مؤقف کو قبول کرتے ہیں۔

ٹیم سلیکشن کے حوالے سے گفتگو کرتے ہوئے سلیکشن پینل کے چیئرمین کورٹنی براؤن نے کہا کہ کچھ کھلاڑیوں کو دورے کے لیے منتخب کیا گیا تھا جن میں ریگولر ٹی ٹوئنٹی کپتان کالوس براتھ ویٹ بھی شامل تھے تاہم انہوں نے سیکیورٹی خدشات کی وجہ سے دورے سے معذرت کرلی۔

انہوں نے  کہا کہ یہ سیریز ان نئے کھلاڑیوں کے لیے ایک اہم موقع ہے جو مستقبل میں ویسٹ انڈین کرکٹ ٹیم کا مستقل حصہ بننا چاہتے ہیں ، ہم امید کرتے ہیں کہ سیریز میں مقابلہ سخت ہوتا , 13 رکنی  سکواڈ میں 4 ایسے کھلاڑی ہیں جو پہلی بار ٹی ٹوئنٹی انٹرنیشنل میچ کھیلیں گے  ، خیال رہے کہ پاکستان کا دورہ کرنے والی ویسٹ انڈین کرکٹ ٹیم اہم کھلاڑیوں کی خدمات سے محروم ہے۔