وفاقی کابینہ کے اہم اجلاس کی اندرونی کہانی سامنے آگئی

وفاقی کابینہ کے اہم اجلاس کی اندرونی کہانی سامنے آگئی

اسلام آباد :وزیر اعظم عمران خان کی زیر صدارت وفاقی کابینہ کا اہم اجلاس ہوا جس میں عمران خان نے واضح کیا کہ حکومت نہ تو کسی ڈیل کا حصہ ہے اور نہ ہی کرپشن کیسز پر کسی قسم کا کوئی سمجھوتہ کیا جائیگا ۔


وفاقی کابینہ کے اجلاس کی اندرونی کہانی سامنے آگئی ،اجلاس میں آزادی مارچ کے حوالے سے بھی انتہائی اہم گفتگو ہوئی ،وزیر اعظم نے سب پر واضح کیا کہ حکومت کسی صورت دباﺅ میں نہیں آئیگی اور نہ ہی حکومت کسی ڈیل کا حصہ ہے ،کرپشن کیسز پر کوئی سمجھوتہ نہیں ہو گا ،وزیرا عظم نواز شریف کی صحت سے متعلق کسی بھی قسم کی بیان بازی سے منع کیا ۔

وزیر اعظم کا کہنا تھا کہ احتجاج پر امن اور قانون کے دائرے میں ہو تو رکاوٹ نہیں کھڑی کرینگے لیکن اگر معاہدے کی خلاف ورزی کی گئی تو قانون اپنا راستہ خود بنائے گا ،انہوں نے کہا آزادی مارچ سے متعلق معاہدہ کرنا اچھا عمل ہے ۔

اجلاس میں معاون خصوصی فردوس عاشق اعوان نے وزار ءکو تنقید کا نشانہ بنا تے ہوئے وزیر اعظم سے شکوہ کیا کہ پیمرا فیصلے پر حکومتی ارکان نے ایسے تنقید کی جیسے وہ اپوزیشن میں ہوں ،وزراءکی طرف سے فیصلوں پر تنقید شرمندگی کا باعث ہے ،فواد چوہدری نے اس معاملے پر بات کرتے ہوئے کہا فیصلے کر کے واپس لیے جائیں تو شرمندگی کا باعث بنتے ہیں ۔