بھارت کی طرف سے عالمی کھلاڑیوں کو کشمیر پریمیئر لیگ میں شرکت سے منع کرنے پر پاکستان کا ردعمل

بھارت کی طرف سے عالمی کھلاڑیوں کو کشمیر پریمیئر لیگ میں شرکت سے منع کرنے پر پاکستان کا ردعمل
سورس: file photo

اسلام آباد:پاکستان کرکٹ بورڈ(پی سی بی) نے بھارتی کرکٹ بورڈ( بی سی سی آئی) کی جانب سے غیر ملکی کرکٹرز کو کشمیر پریمیئر لیگ (کے پی ایل) میں شرکت سے روکنےکی کوششوں پر سخت ناراضگی کا اظہار کیا ہے۔

 پی سی بی کی جانب سے جاری اعلامیے کے مطابق پاکستان کرکٹ بورڈ نے ان خبروں پر ناراضگی کا اظہار کیا ہے کہ بی سی سی آئی نے آئی سی سی کے متعدد ممبران کو بلا کر انہیں اپنے ریٹائرڈ کرکٹرز کو کشمیر پریمیئر لیگ سے نام واپس لینے پر مجبور کیا ہے۔

 پاکستان کی طرف سے کہا گیا ہے کہ پی سی بی سمجھتا ہےکہ بی سی سی آئی نے ایک بار پھر نہ صرف آئی سی سی ممبران کے اندرونی معاملات میں مداخلت کی ہے بلکہ بی سی سی آئی کے رویے سے جنٹلمین کھیل کی اسپرٹ کو نقصان پہنچا ہے۔

پی سی بی کا کہنا ہے کہ  بی سی سی آئی نے آئی سی سی کے متعدد ممبران کو وارننگ جاری کرتے ہوئے ان کے ریٹائرڈکرکٹرز کو کشمیر پریمیئر لیگ میں شرکت سے روک کر کھیل کو بدنام کیا ہے اور بی سی سی آئی نے مزید دھمکی دی ہےکہ انہیں کرکٹ سے متعلق کام کے لیے بھارت میں داخلے کی اجازت نہیں ہوگی۔ 

 پی سی بی کے مطابق بی سی سی آئی کی جانب سے اس طرح کا طرز عمل مکمل طور پر ناقابل قبول ہے، ایسے طرز عمل کو نہ تو برداشت کیا جاسکتا ہے اور نہ ہی نظر انداز کیا جا سکتا ہے، پی سی بی اس معاملے کو آئی سی سی کے مناسب فورم پر اٹھائے گا بلکہ آئی سی سی چارٹر کے مطابق مزید کارروائی کا حق بھی محفوظ رکھتا ہے۔