پولیس پر تشدد،چیف جسٹس کا پی ٹی آئی کے نومنتخب ایم پی اے ندیم بارا کو گرفتار کرنے کا حکم

پولیس پر تشدد،چیف جسٹس کا پی ٹی آئی کے نومنتخب ایم پی اے ندیم بارا کو گرفتار کرنے کا حکم

فائل فوٹو

لاہور:پاکستان تحریک انصاف کے نو منتخب ایم پی اے ندیم عباس بار اکو چیف جسٹس نے فوری طور پر گرفتار کرنے  اور نام ای سی ایل میں ڈالنے کا حکم دے دیا۔چیف جسٹس ثاقب نثار نے صاف صاف بتا دیا جنہیں قانون کی عزت نہیں کرنی آتی ،انہیں چھوڑیں گے نہیں ۔

تفصیلات کے مطابق سپریم کورٹ لاہور رجسٹری میں مقدمات کی سماعت کے دوران چیف جسٹس نے ندیم عباس کے ڈیرے پر فائرنگ اور پولیس پر تشدد کا ازخود نوٹس لیتے ہوئے آئی جی پنجاب سید کلیم امام اور دیگر افسران کو طلب کیااور وہ عدالت کے روبرو پیش ہوئے ۔انہوں نے بتایا کہ اہلکاروں پر تشدد کرنے والے 50 افراد کے خلاف دہشت گردی کی دفعات کے تحت مقدمہ درج کر لیا گیا ہے۔

یہ بھی پڑھیں:عمران خان 14 اگست تک وزیراعظم کا حلف اٹھالیں گے

آئی جی پنجاب نے عدالت کو مزید بتایا کہ اہلکاروں کو تشدد کے الزام میں 21 افراد کو گرفتار کیا گیا ہے جبکہ 28 ملزمان مقدمے میں نامزد ہیں۔چیف جسٹس پاکستان نے معاملے پر ازخود نوٹس لیتے ہوئے تحریک انصاف کے نومنتخب ایم پی اے ندیم عباس بارا کو گرفتار کرنے کا حکم دیا۔

یہ بھی پڑھیں:این اے 131، دوبارہ گنتی میں بھی سعد رفیق ہار گئے
خیال رہے کہ گزشتہ روز پولیس اہلکاروں کی ایک ٹیم پی ٹی آئی کے نومنتخب رکن صوبائی اسمبلی ندیم عباس بارا کے ڈیرے پر پہنچی تو اہلکاروں کو تشدد کا نشانہ بنایا گیا اور وردیاں تک پھاڑ دی گئیں جس کے بعد ملزمان فرار ہونے میں کامیاب ہوگئے تھے۔

یہ بھی پڑھیں:سینئر پی ٹی آئی رہنما اعجاز احمد چودھری کو گورنر پنجاب بنائے جانے کا قوی امکان

واقعے کے خلاف سرکار کی مدعیت میں درج کرلیا گیا جس میں پی ٹی آئی رہنما ندیم بارا، منیر بارا سمیت 27 نامزد اور 20 نامعلوم افراد کو شامل کیا گیا ہے۔ مقدمے میں اقدام قتل اور دہشت گردی سمیت دیگر دفعات شامل کی گئی ہیں۔مقدمے کے متن کے مطابق ملک ندیم بارا کے دفتر پر فائرنگ اور آتش بازی کی اطلاع ملنے پر پولیس پارٹی وہاں پہنچی تو مسلح کارکنان کی جانب سے مزاحمت کی گئی اور اہلکاروں کو تشدد کا نشانہ بنایا گیا۔

نیو نیوز کی براہ راست نشریات، پروگرامز اور تازہ ترین اپ ڈیٹس کیلئے ہماری ایپ ڈاؤن لوڈ کریں